شہباز شریف ذاتی مفاد چھوڑ کر لشکر جھنگوی کے خلاف کارروائی کریں، رحمان ملک Reviewed by Momizat on . اسلام آباد میں وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ پنجاب حکومت لشکر جھنگوی کیخلاف کارروائی سے گریز کر رہی ہے۔ فاٹا، رحیم یار خان اور میرانشاہ پنجابی طالبان کے گڑھ ہیں۔ تح اسلام آباد میں وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ پنجاب حکومت لشکر جھنگوی کیخلاف کارروائی سے گریز کر رہی ہے۔ فاٹا، رحیم یار خان اور میرانشاہ پنجابی طالبان کے گڑھ ہیں۔ تح Rating:
You Are Here: Home » Urdu - اردو » شہباز شریف ذاتی مفاد چھوڑ کر لشکر جھنگوی کے خلاف کارروائی کریں، رحمان ملک

شہباز شریف ذاتی مفاد چھوڑ کر لشکر جھنگوی کے خلاف کارروائی کریں، رحمان ملک

شہباز شریف ذاتی مفاد چھوڑ کر لشکر جھنگوی کے خلاف کارروائی کریں، رحمان ملک
اسلام آباد میں وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ پنجاب حکومت لشکر جھنگوی کیخلاف کارروائی سے گریز کر رہی ہے۔ فاٹا، رحیم یار خان اور میرانشاہ پنجابی طالبان کے گڑھ ہیں۔ تحریک طالبان اور لشکر جھنگوی الیکشن کا انعقاد نہیں چاہتے۔
اسلام ٹائمز۔ وفاقی وزیر داخلہ رحمن ملک نے کہا ہے کہ کالعدم تنظیمیں کراچی میں امن نہیں چاہتیں۔ فاٹا، رحیم یار خان اور میرانشاہ پنجابی طالبان کے گڑھ ہیں، بادامی باغ واقعہ بیڈ گورننس کا سب سے بڑا ثبوت ہے۔ وفاقی وزیر داخلہ رحمان ملک کا کہنا ہے کہ شہباز شریف ذاتی مفاد چھوڑ کر لشکر جھنگوی کے خلاف کارروائی کریں، تاریخ میں بیڈ گورننس کا سب سے بڑا ثبوت بادامی باغ واقع ہے۔ انہوں نے کہا کہ کالعدم تنظیمیں کراچی میں امن نہیں چاہتیں، فاٹا، رحیم یار خان اور میرانشاہ، پنجابی طالبان کے گڑھ ہیں، کالعدم تحریک طالبان اور لشکر جھنگوی پاکستان میں انتخابات نہیں چاہتیں۔ انہوں نے افغان حکومت سے مطالبہ کیا کہ مطلوب دہشت گرد پاکستان کے حوالے کئے جائیں۔ وفاقی وزیر داخلہ کا مزید کہنا ہے کہ پنجاب حکومت لشکر جھنگوی کیخلاف کارروائی سے گریز کر رہی ہے، جمہوری حکومت اور سیاسی لیڈروں پر تنقید معمول کی بات ہے۔

دیگر ذرائع کے مطابق وزیر داخلہ رحمان ملک نے ایک بار پھر کہا ہے کہ پنجاب حکومت لشکر جھنگوی کے خلاف کارروائی نہیں کر رہی، الیکشن کے دوران کچھ ہوا تو ذمہ دار پنجاب حکومت ہوگی۔
وفاقی وزیر داخلہ رحمان ملک نے ایک بار پھر ملک میں بڑھتی ہوئی دہشتگردی کی روک تھام کے لئے پنجاب حکومت کو لشکر جھنگوی کے خلاف کارروائی کرنے کا کہتے ہوئے کہا ہے کہ قوم کی ترقی کے لئے ذاتی مفادات کو قربان کرنا پڑتا ہے۔ پنجاب کے وزیراعلٰی میاں شہباز شریف اپنے ذاتی مفادات کو چھوڑ کر لشکر جھنگوی کے خلاف فوری کارروائی کریں۔ پنجاب حکومت لشکر جھنگوی کے خلاف کارروائی سے گریز کر رہی ہے۔ فاٹا، رحیم یار خان اور میرانشاہ پنجابی طالبان کے گڑھ ہیں۔ تحریک طالبان اور لشکر جھنگوی الیکشن کا انعقاد نہیں چاہتے۔ الیکشن کے دوران اگر کچھ ہوا تو اس کی ذمہ دار پنجاب حکومت ہو گی۔ رحمان ملک کا کہنا تھا کہ افغانستان میں موجود مولوی فقیر پاکستانیوں کا قاتل ہے۔ افغان حکومت اگر پاکستان کی خیر خواہ ہے تو مولوی فقیر محمد کو فوی پاکستان کے حوالے کیا جائے۔

About The Author

Number of Entries : 6115

Leave a Comment

You must be logged in to post a comment.

© 2013

Scroll to top