ایران کو خطرہ قرار دینے والے خود عالمی امن و صلح کے لئے خطرہ بن گئےہیں Reviewed by Momizat on . اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حجۃ الاسلام والمسلمین حسن روحانی نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کےسالانہ اجلاس سے خطاب میں بعض ممالک کی جانب سے جنگ کا طبل بجانے اور اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حجۃ الاسلام والمسلمین حسن روحانی نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کےسالانہ اجلاس سے خطاب میں بعض ممالک کی جانب سے جنگ کا طبل بجانے اور Rating:
You Are Here: Home » Urdu - اردو » ایران کو خطرہ قرار دینے والے خود عالمی امن و صلح کے لئے خطرہ بن گئےہیں

ایران کو خطرہ قرار دینے والے خود عالمی امن و صلح کے لئے خطرہ بن گئےہیں

ایران کو خطرہ قرار دینے والے خود عالمی امن و صلح کے لئے خطرہ بن گئےہیں
اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حجۃ الاسلام والمسلمین حسن روحانی نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کےسالانہ اجلاس سے خطاب میں بعض ممالک کی جانب سے جنگ کا طبل بجانے اور جنگ کے لئے اتحادی ڈھونڈنے کے بجائے دنیا میں امن و صلح کی ضرورت پر زوردیتے ہوئے کہا کہ ایران کو خطرہ قرار دینے والے خود عالمی امن و صلح کے لئے خطرہ بن گئےہیں۔

ایران کو خطرہ قرار دینے والے خود عالمی امن و صلح کے لئے خطرہ بن گئےہیں _ تصویر
اہل البیت(ع) نیوز ایجنسی ـ ابنا ـ کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حجۃ الاسلام والمسلمین حسن روحانی نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کےسالانہ اجلاس سے خطاب میں بعض ممالک کی جانب سے جنگ کا طبل بجانے اور جنگ کے لئے اتحادی ڈھونڈنے کے بجائے دنیا میں امن و صلح کی ضرورت پر زوردیتے ہوئے کہا کہ ایران کو خطرہ قرار دینے والے خود عالمی امن و صلح کے لئے خطرہ بن گئےہیں۔

ایرانی صدر نے کہا کہ دنیا میں خوف اور امید کی فضا قائم ہے جنگ ، دشمنی اور دہشت گردی سے علاقائی اور عالمی سطح پرخوف طاری ہے لیکن اس خوف و ہراس کے باوجود امیدیں بھی بڑھ گئی ہیں اب دنیا میں امن و صلح کی حمایت اور جنگ کی مخالفت کی جارہی ہے جنگ و انتہا پسندی پر صلح و اعتدال کی فتح یقینی ہے ۔

صدر حسن روحانی نے کہا کہ تسلط پسندی کا دور ختم ہوگیا ہے قومیں بیدار ہوچکی ہیں غلط اندازوں سے سنگین نتائج برآمد ہورہے ہیں ۔ہم کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کی مذمت کرتے ہوئے شام کی طرف سے کیمیائی ہتھیاروں کے معاہدے سے ملحق ہونے کا استقبال کرتے ہیں۔

صدر حسن روحانی نے کہا کہ آج دنیا کو دہشت گردی کا خطرہ لاحق ہے دہشت گردوں نے ایرانی سائنسدانوں کوشہید کیا لیکن دہشت گردوں کے اس فعل کی عالمی سطح پر مذمت نہیں کی گئی ۔ ایرانی صدر نے کہا کہ ہم عراق، افغانستان، فلسطین اور بحرین میں بےگناہ افراد کو قتل کرنے کی پر زور الفاظ میں مذمت کرتے ہیں، ہم بےگناہ افراد پر ڈرون حملوں کی مذمت کرتے ہیں۔

ایرانی صدر نے ایران کے ایٹمی پروگرام کو پرامن اور بین الاقوامی ایٹمی ایجنسی کی نگرانی میں قراردیتے ہوئے کہا کہ ایرانی قوم اپنے حقوق سے پیچھے نہیں ہٹے گی اور ایران اپنے قومی اور ملکی مفادات کا سودانہیں کرسکتا ۔ صدر روحانی نے کہا کہ ایٹمی ہتھیاروں کی ممنوعیت کے بارے میں ایران کے روحانی پیشوا حضرت آیت اللہ العظمی خامنہ ای کا فتوی موجود ہے لہذا ایران نہ ایٹمی ہتھیاروں کے پیچھے ہے اور نہ ہی ایٹمی ہتھیاروں کی دوڑ میں شامل ہونا چاہتا ہے بلکہ ایران پوری دنیا سے ایٹمی ہتھیاروں کے خاتمہ کا خواہاں ہے اور ایران دنیا میں امن و صلح کے سلسلے میں اپنی تلاش و کوشش جاری رکھےگا۔

About The Author

Number of Entries : 6115

Leave a Comment

You must be logged in to post a comment.

© 2013

Scroll to top